سڑک کے کنارے ایک فقیر بیٹھا ہوا تھا اس

سڑک کے کنارے ایک فقیر بیٹھا ہوا تھا اس کے پاس کار آ کر رکی اس میں سے ایک آدمی اترا اور فقیر سے بولا۔
کیا تم جوا کھیلتے ہو؟۔
فقیر نہیں
کیا شراب پیتے ہو؟
نہیں جناب
کیا کلب جاتے ہو؟
نہیں
رات کو گھر دیر سے جاتے ہو
نہیں حضور. فقیر نے گھبرا کر جواب دیا۔
اچھا تو پھر میرے ساتھ گھر چلو میں اپنی بیگم کو بتانا چاہتا ہوں جو لوگ یہ سب کام نہیں کرتے ان کی حالت کیا ہوتی ہے۔