عرب کا ایک مشہور قلم کار جاحظ جا رہا تھا راستے میں اُسے ایک خوبصرت نازنین ملی او

عرب کا ایک مشہور قلم کار جاحظ جا رہا تھا راستے میں اُسے ایک خوبصرت نازنین ملی اور اُسے اپنے ساتھ چلنے کا اشارہ کیا
جاحظ کافی بدصورت تھا اس لئے اسے حیرت ہوئی کہ اتنی خوبصورت حسینہ کیسے اس پر عاشق ہو گئی
دونوں ایک آرٹسٹ کی دکان میں داخل ہوئے اور وہ چینچل حسینہ مصور سے یہ کہہ کر بھاگ گئی کہ:
لو یہ ہے
اب جاحظ حیرت زدہ کھڑا تھا مصور خود ہی بولا:
بات یہ ہے کہ یہ حسینہ میرے پاس آئی اور کہنے لگی کہ مجھے شیطان کی تصویر بنا دو
لیکن میں نے کہا:میں نے تو کبھی شیطان دیکھا ہی نہیں ہے بھلا ایک ان دیکھی صورت کی تصویر کیسے بناؤں
چناچہ وہ گئی اور تمھیں پکڑ کر لے آئی

Rate This Joke
No votes yet
Urdu-Jokes