لطیفے

warning: Creating default object from empty value in /home/freeurdujokes/public_html/modules/taxonomy/taxonomy.pages.inc on line 33.

اپنی ساری رقم فوراً میرے حوالے کر دو ن

اپنی ساری رقم فوراً میرے حوالے کر دو نہیں تو ابھی تم کو گولی ما ر دوں گا۔ ایک ڈاکو نے ایک شخص سے کہا۔
وہ شخص پستول کی طرف مسلسل گھورنے لگا۔ ڈاکو نے کچھ دیر انتظار کیا اور پھر دھاڑا۔ جلدی بولو زندگی یا رقم۔
وہ شخص بولا۔ ’’خاموش رہو‘‘ میں ابھی اس مسئلے پر غور کر رہا ہوں۔

اغوا برائے تاوان کی ایک خبر پڑھ کر بیو

اغوا برائے تاوان کی ایک خبر پڑھ کر بیوی نے خاوند سے پوچھا اگر کوئی مجھے اغوا کر لے تو تم کتنا تاوان دو گے۔
خاوند نے مسکرا کر جواب دیا۔ تاوان یا انعام۔

ابراہیم لنکن نے خانہ جنگی کے دوران اپن

ابراہیم لنکن نے خانہ جنگی کے دوران اپنے تمام جرنیلوں کو حکم دے رکھا تھا کہ ہر کاروائی کی اسے رپورٹ بھیجی جائے۔ ایک دن ایک جرنیل کا تار آیا کہ چھ گائیں ہاتھ لگی ہیں ان کے بارے میں حکم؟
ابراہیم لنکن نے جوابی تار دیا ان کا دودھ نکالیے۔

امپائر نے ایک کھلاڑی کو ایل بی ڈبلی

امپائر نے ایک کھلاڑی کو ایل بی ڈبلیو دے دیا۔ کھلاڑی بہت خفا ہوا اور پویلین کی طرف واپس جاتے ہوئے سفید کوٹ والے سے مخاطب ہوا۔
’’جس طرح تم نے مجھے ایل بی ڈبلیو دیا ہے اس سے مجھے یقین ہو گیا ہے کہ تمہیں عینک کی ضرورت ہے۔‘‘
’’عینک کی ضرورت تمہیں بھی ہے۔‘‘ سفید کوٹ والے نے کہا۔ کیونکہ میں امپائر نہیں آئس کریم بیچنے والا ہوں‘‘۔

استاد : میری ایک کتاب گم ہے جسے پتا ہو

استاد : میری ایک کتاب گم ہے جسے پتا ہو وہ بتا دے۔ میں کتاب اسی کو دے دوں گا اور اس کے علاوہ پچاس روپے نقد انعام بھی دوں گا۔
ایک شاگرد جناب ! پچاس روپے دے دیں کتاب پہلے ہی میرے گھر میں ہے۔

Syndicate content