لطیفے

" بیگم تم نے لڑکی کو بتا دیا نا ۔۔ کہ ۔۔

" بیگم تم نے لڑکی کو بتا دیا نا ۔۔ کہ ۔۔۔ اگر اس نے ہماری مرضی کے خلاف شادی کی ۔۔۔ تو ۔۔ ہم اسے جائیداد سے عاق کر دیں گے"شوہر نے بیوی سے پوچھا
" لڑکی کو بتانے کی ضرورت نہیں ۔۔۔ میں نے اس کے بوائے فرینڈ کو بتا دیا تھا، تب سے اس نے ادھر کا رخ نہیں کیا ۔۔" بیوی نے جواب دیا

! آہ ماسٹر بیمار کیوں نہیں ہوتا ؟یا اللہ !ماسٹر جی ریاضی و انگریزی والے ما

! آہ ماسٹر بیمار کیوں نہیں ہوتا ؟
یا اللہ !
ماسٹر جی ریاضی و انگریزی والے ماسٹر جی بیمار ہوجائیں آج ان کو کوئی ضروری کام پڑجائے مگر اس کی آہیں سنی نہیں جاتیں اور ماسٹر جی آجاتے ہیں اور اسے خوب مارپڑتی ہے پھر یہ کلاس میں روتا ہے ۔۔۔ وہ مختلف غموں کا اظہار کرتا ہے چھٹی کیوں نہیں ہوتی ؟
* کاش سبق نہ سنا جائے صرف پڑھایا جائے جس طر�* کالجوں میں ہوتا ہے ۔ اتوار کا دن جلدی کیوں ختم ہوجاتا ہے ؟ باقی دن لمبت کیوں ہوتے ہیں ؟ چھٹیاں ہوتی ہیں سیر کرنے کے لئے اور ماسٹر جی ساری ساری کتاب کا سبق لکھنے اور یاد کرنے کو دے دیتے ہیں*اگر اتنا کام دینا تھا تو چھٹیاں کیوں دیں ؟* اس کا ذہن چھوٹا ہوتا ہے ۔۔۔۔۔۔
آہ بھرتا ہے اور کام بھی کرتا ہے ۔

استاد صاحب نے کتاب کا آخری صفحہ پڑھاتے ہ

استاد صاحب نے کتاب کا آخری صفحہ پڑھاتے ہوئے کہا۔
"بچو امتحان میں بہت کم وقت رہ گیا ہے ۔ خوب محنت کرو۔ دل لگا کر پڑھو۔ اب تمہارے پرچے سر پر ہیں ۔ اب تو تمہارے پرچے بھی پریس چھپنے کے لیے چلے گئے ہیں۔۔
اگر اب کوئی بچہ مجھ سے سوال پوچھنا چاہے تو پوچھ لیں۔
ایک بچے نے کہا۔"ہمارے پرچے کس پریس میں چھپ رہے ہیں یہ بتا دیں۔"

استانی چاٹ والے سے ۔۔۔۔"جلدی سے مجھے چاٹ

استانی چاٹ والے سے ۔۔۔۔"جلدی سے مجھے چاٹ دو ۔۔۔:
چاٹ والا "ایک منٹ پہلے ان کو دے دوں یہ پہلے آئے ہیں پھر آپ کو چاٹ دیتا ہوں ۔۔۔۔ :
استانی : پہلے مجھے چاٹ دو ۔۔۔میرے پیریڈ شروع ہونے والے ہیں ۔۔۔۔۔۔:

جہاز میں دو غیرمسلم کاروباری دورے کیلیے

جہاز میں دو غیرمسلم کاروباری دورے کیلیے روانہ ھورھے تھے
اتنی دیر میں ایک مسلم جوڑے کی آمد اور عین غیرمسلم کے پیچھے
بیٹھ گیے کیونکہ نشست انکو یہی ملی تھی۔۔۔
اب غیر مسلم کا رو یہ انکے ساتھ جہاز میں کیسا تھا ملاحضہ کریں۔۔
ایک غیر مسلم دوسرے سے مخاطب۔
ایک دفعہ میرے باس نے مجھے سعودی عرب جانے کیلیے کہا لیکن میں نے انکار
کردیا ۔
دوسرے نے پوچھا زوردارلہجےمیں وہ کیوں۔۔
اسی انداز میں جواب دیا۔۔۔۔
کیونکہ وہاں سب کے سب مسلمان۔ ھا ھا ھا
اب دوسرا والا۔۔
مجھے بھی اسطرح کا اتفاق ھوا ایک دفعہ ۔ باس نے کہا تمھیں پاکستان جانا پڑے گا
ایک بڑی ڈیل طے کرنے کیلیے۔۔ میں نے انکار کردیا ۔
وہ کیوں
وھاں بھی تو مسلمان ھیں
اسی طرح تکلیف دینے والی باتوں کا سلسلہ مسلسل چلتا رھا وہ بھی بڑے زور و شور سے جاری تھا
آخر مسلمان مرد بول پڑا
تم سب کو معلوم ھے تم لوگ جنت نھیں جاؤ گے
غیر مسلم نے مزاحیہ انداز میں پوچھا وہ کیوں
۔۔
۔۔
۔۔
۔۔
۔
اسلیے کہ وھاں بھی مسلمان بستے ھیں۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

آثارِقدیمہ کاماہر پرانی چیزوں کی تلاش می

آثارِقدیمہ کاماہر پرانی چیزوں کی تلاش میں شہر شہر گاؤں گاؤں گھوم رہا تھا ۔
ایک چھوٹے سے گاؤں کی پرانی سی دوکان پر اسے ایک بہت ہی قیمتی اور قدیم زمانے کا پیالہ نظر آیا، جس میں دوکاندار کی بلّی دودھ پی رہی تھی۔
اس نے سوچا اگر دوکان دار سے پیالہ مانگا تو وہ پیالے کی اہمیت جان جائے گا۔ چنانچہ اس نے بہت اصرار کرکے اس کی بلّی پانچ ہزار میں خرید لی ۔
بلّی خریدنے کے بعد اس نے کہا "یہ پیالہ مجھے دے دو کیوںکہ بلّی اس پیالے کی عادی ہو چکی ہے ۔ویسے بھی یہ اب تمھارے لئے بے کار ہے " ۔
اس پر دوکاندار بولا " میاں بےوقوف کسی اور کو بنانا ۔ اس پیالے کے چکر میں تو اب تک بیس بلّیاں بیچ چکا ہوں " ۔

آٹھ فیٹ اونچی دیوار پر ایک مرغا بیٹھا تھ

آٹھ فیٹ اونچی دیوار پر ایک مرغا بیٹھا تھا کہ ادھر سے ایک بھیڑیے کا گزر ہوا۔
مرغے کو دیکھ کر اس کے منھ میں پا نی بھر آیا۔ یہ دیکھ کر مرغے نے آواز لگائی:
"چچا میاں! آپ کی طبیعت تو ٹھیک ہے منھ سے رال بہ رہی ہے۔"
یہ سن کر بھیڑیے نے غرا کر کہا:"بچے !یہ تو نہیں بول رہا ہے۔آٹھ فیٹ اونچی دیوار بول رہی ہے۔

"ڈاکٹر صاحب آپ نے مجھے ڈائٹنگ کا جو پروگ

"ڈاکٹر صاحب آپ نے مجھے ڈائٹنگ کا جو پروگرام دیا ہے وہ کافی سخت ہے خوراک کی کمی کی وجہ سے میں کافی چڑچڑی ہوتی جا رہی ہوں۔۔
کل میرا اپنے میاں سے جھگڑا ہو گیا اور میں نے ان کا کان کاٹ کھایا۔"
"گھبرانے کی ضرورت نہیں محترمہ ۔" ڈاکٹر نے اطمینان سے جواب دیا ۔"ایک کان میں سو حرارے ہوتے ہین۔"