ایک دکاندار نے اپنے بیٹے کو سمجھایا:یاد

ایک دکاندار نے اپنے بیٹے کو سمجھایا:یاد رکھو دکانداری کے دو اصول کبھی نہ بھولنا
بیٹا:وہ کون سے ابا جی
باپ:وہ یہ ہے کہ اگر تم کسی سے وعدو کرو تو ہر حال میں پورا کرو
بیٹے نے پوچھا:اور دوسرا کون سا ہے؟
کسی سے وعدہ ہی نہ کرو۔باپ نے جواب دیا

ایک شخص کے بارے میں مشہور تھا کہ وہ خط اچھا لکھ کر دیتا ہے۔ایک بوڑھا اس کے پاس ج

ایک شخص کے بارے میں مشہور تھا کہ وہ خط اچھا لکھ کر دیتا ہے۔ایک بوڑھا اس کے پاس جاکر کہنے لگا صدر کے نام میری طرف سے خط لکھو اور اسے میرے برے حالات سے آگاہ کرو۔ تھوڑی دیر میں اس نے خط لکھ دیا بوڑھے نے کہا پڑھ کر سناؤ
اس نے خط پڑھ کر سنایا تو بوڑھا پھوٹ پھوٹ کر رونے لگا ۔
اس شخص نے پوچھا بابا جی آپ رونے کیوں لگ گئے؟
بوڑھا جواب میں بولا: بیٹا مجھے خود پتہ نہیں تھا کہ میرے حالات اتنے برے ہیں۔