ایک شخص ہمیشہ اپنی سیاحت کے قصے سناتا رہتا تھا۔ ایک روز اس کی اپنے دوست سے ملا

ایک شخص ہمیشہ اپنی سیاحت کے قصے سناتا رہتا تھا۔ ایک روز اس کی اپنے دوست سے ملا قات ہوئی۔ اس کے دوست نے پوچھا
" کبھی ہندوستان گئے "
"ہاں ہندوستان گیا تھا "
"اور افریقہ دیکھا ? " دوست نے پوچھا
"ہاں وہاں تو دو سال گزارے "
"خوب،،،امریکہ اور آسٹر یلیا ، وہاں بھی گئے ?"
"بالکل۔ بالکل"
"پھر تو تم نے جغرافیہ سے خوب واقف ھوگے?"
"جغرافیہ ? ہاں ہاں ۔ دو روز ھوئے وہیں سے واپس آیا ھوں

بھائی جان " کیا تمہارے ماسٹر صاحب یہ سمجھ گئے ۔۔ کہ ۔۔۔ ان سوالات کو حل کرنے می

بھائی جان " کیا تمہارے ماسٹر صاحب یہ سمجھ گئے ۔۔ کہ ۔۔۔ ان سوالات کو حل کرنے میں ، میں نے تمہاری مدد کی تھی ؟
عادل : ہاں ، وہ کہتے تھے ۔۔۔ کہ ۔۔۔ یہ کام دو آدمیوں کا ہے ۔ صرف ایک آدمی اتنی غلطیاں نہیں کر سکتا ۔۔۔ "

ایک سہیلی دوسری سے : تم اتنے بوڑھے آدمی

ایک سہیلی دوسری سے : تم اتنے بوڑھے آدمی سے شادی کیوں کر رہی ہو ؟
دوسری خوبصورت گڑیا سی پیاری اور حسین سہیلی نے کہا " تمہارا کیا خیال ہے کہ میں اس نوے سال کے بڈھے سے شادی کر رہی ہوں ۔ :
: تو اور کیا ۔۔ وہ کروڑ پتی ہے ۔ اسی لئے تم اس سے شادی کر رہی ہو ۔ :
تم غلط سمجھی ہو ۔۔ میں کچھ عرصے کے لئے اپنے آپ کو اس کے پاس گروی رکھ رہی ہوں ۔۔ :