ٹیچر نے کلاس روم میں دیکھا کہ پچھلی بینچ پر بیٹھا ہوا ایک لڑکا کبھی منہ چلا رہا

ٹیچر نے کلاس روم میں دیکھا کہ پچھلی بینچ پر بیٹھا ہوا ایک لڑکا کبھی منہ چلا رہا ہے اور کبھی عجیب عجیب شکلیں بنا رہا ہے۔
"اے۔۔۔فاخر۔۔!" ٹیچر نے اسے پکارا۔ "یہاں سامنے آؤ۔۔۔اور جو کچھ تمہارے منہ میں ہے، مجھے دے دو۔"
"کاش میں ایسا کر سکتا ٹیچر۔" فاخر نے کراہتے ہوئے کہا۔ "میرے منہ میں تو چھالے ہیں۔"