آر یو ریلیکسنگ ؟ایک سردار جی ویسٹ انڈ

Joke Body

آر یو ریلیکسنگ ؟
ایک سردار جی ویسٹ انڈیز انڈیا سیریز کے میچ دیکھنے کے لئے ویسٹ انڈیز گئے انھوں نے ویسٹ انڈیز کے ساحلوں کے بارے بہت سن رکھا تھا سو وہ سمندر کنارے سن باتھ کے لئے چلے گئے
کچھ دیر گزری تھی کہ ایک انگریز کا گزر ہوا اور اس نے سردار جی سے پوچھا آر یو ریلیکسنگ ؟
سردار جی بولے نو نو آئی ایم ناٹ ریلیکسنگ
آئی ایم ہرنام سنگھ
کچھ دیر مزید گزری کہ ایک سیاہ فام عورت نے گزرتے ھوئے پھر وہی سوال دہرایا
سردار جی کا جواب پھر وہی تھا
خیر جو بھی وہاں سے گزرتا وہ یہی پوچھتارہا سردار جی کا سکون غارت ہو گیا
اور وہ آگ بگولا ہو کر ایک طرف چل دیئے
کچھ دور جانے کے بعد ان کو ایک اور سردار منہ پر ہیٹ لئے لیٹا نظر آیا
ہرنام سنگھ نے اس کے منہ سے ہیٹ پیچھے کیا اور پوچھا
آر یو ریلیکسنگ ؟
دوسرے سردار جی نے جواب دیا
یس آئی ایم ریلیکسنگ
ہرنام سنگھ نے ایک زور کا طمانچہ اس کے منہ پر مارا اور کہا
“اوئے کھوتے دے پتر توں ایتھے پیا ایں تے اوتھے تینوں سارے لب رئے نیں“

Rate This Joke
No votes yet

ایک پاگل ھر وقت ایک ھی بات کی رٹ لگاتا ر

Joke Body

ایک پاگل ھر وقت ایک ھی بات کی رٹ لگاتا رھتا تھا۔ کہ
غلیل بناؤں گا اور چڑیاں ماروں گا۔
غلیل بناؤں گا اور چڑیاں ماروں گا۔
غلیل بناؤں گا اور چڑیاں ماروں گا۔
غلیل بناؤں گا اور چڑیاں ماروں گا۔
اسکے گھر والوں نے اسے پاگل خانے میں داخل کروا دیا۔ کافی عرصہ علاج ھوتا رھا آخر کار وہ ٹھیک ھوگیا۔ اسے چھٹی دیتے وقت ڈاکٹر نے اس سے پوچھا۔ اپ تم چھٹی کے بعد کیا کرو گے۔ پاگل نے جواب دیا۔ کسی دوست سے تھوڑی رقم ادھار لے کر کاروبار کروں گا۔ جب کاروبار چل پڑے گا تو پھر شادی کروں گا۔ پھر بچے ھوں گے تو ان کے کپڑے خریدوں گا۔ جب ان کپڑے پرانے ھوجایا کریں گے تو ان کے نیکر میں سے الاسٹک نکال کر اسکی
غلیل بناؤں گا اور چڑیاں ماروں گا۔

Rate This Joke
No votes yet